جنسی طور پر ہراساں ہونے والی خواتین کی مہم ’’ می ٹو‘‘ نے دنیا کو ہلا دیا

شوبز
39
0
sample-ad
سابق مس ورلڈ اور بالی ووڈ کی خوبصورت اداکارہ 44 سالہ ایشوریا رائے نے کہا ہے کہ جو خواتین می ٹو مہم کے تحت اپنے تجربات پر شیئر کررہی ہیں انہیں مزید مدد کی ضرورت ہے۔
غیرملکی میڈیا کے مطابق می ٹو کے ذریعے خواتین اپنے ساتھ ہونے والے نامناسب واقعات کو بیان کرتی ہیں، سوشل میڈیا پر یہ مہم گزشتہ برس اکتوبر میں اس وقت شروع ہوئی تھی، جب ہا لی ووڈ کی متعدد خواتین نے ہالی ووڈ پروڈویسر ہاروی وائنسٹن پر جنسی طور پر ہراساں کیے جانے کا الزام عائد کیا تھا۔تاہم اپنے ایک بیان میں ایشوریا رائے کا کہناتھا کہ ’’ می ٹو‘‘ جنسی طور پر ہراساں ہونے والی خواتین کی مہم نے دنیا کو ہلا دیا، جو خواتین می ٹو مہم کے تحت اپنے تجربات پر شیئر کررہی ہیں انہیں مزید مدد کی ضرورت ہے۔ واضح رہے کہ اس سے قبل شلپا شیٹھی نے گزشتہ ماہ 26 ستمبر کو اداکار نانا پاٹیکر پر جنسی طور پر ہراساں کیے جانے کا الزام لگانے والی اداکارہ تنوشری دتہ کی حمایت کرتے ہوئے کہا تھا کہ خواتین کو کسی خوف کے بغیر اپنے ساتھ ہونے والے واقعات کو سامنے لانا چاہیے۔
sample-ad

Facebook Comments

POST A COMMENT.