وزیراعظم کا معاشی صورتحال پرقوم کواعتماد میں لینےکا فیصلہ

پاکستان
13
0
sample-ad

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے وزیرخزانہ اسد عمر پر اظہار عدم اطمینان کردیا ہے، انہوں نے کہا کہ اسد عمر کو ہوم ورک مکمل کرکے رکھنا چاہیے تھا، ٹھوس منصوبہ بندی نہ ہونے سے عوامی ردعمل کا سامنا بھی کرنا پڑا،وزیراعظم نے ایک ہفتے میں قوم کواقتصادی صورتحال پراعتماد میں لینے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق وزیراعظم عمران خا ن کی زیرصدارت پارٹی رہنماؤں کا غیررسمی مشاورتی اجلاس ہوا ہے۔
جس میں ملک کی موجود اور انتہائی خراب معاشی صورتحال کا جائزہ لیا گیا۔ اس موقع پروزیراعظم عمران خان نے وفاقی وزیرخزانہ اسد عمر کی معاشی پالیسیوں پراظہار عدم اطمینان کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ وزیرخزانہ کو اقتصادی صورتحال پر پیشگی منصوبہ بندی کرنی چاہیے تھی۔

اسد عمر کو ہوم ورک مکمل کرکے رکھنا چاہیے تھا۔انہوں نے کہا کہ ٹھوس منصوبہ بندی نہ ہونے سے عوامی ردعمل کا سامنا بھی کرنا پڑا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے ایک ہفتے میں قوم کواقتصادی صورتحال پراعتماد میں لینے کا فیصلہ کیا ہے۔وزیراعظم عمران خان اپنے خطاب میں قوم کوروشن مستقبل کی نوید بھی دیں گے۔ واضح رہے وزیرخزانہ اسد عمر ملک کی معاشی صورتحال کی بربادی کے بعد ملکی خزانے کو سہارا دینے کیلئے آئی ایم ایف کے پاس چلے گئے ہیں۔ دوسری جانب وزیراعظم عمران خان نے بلوچستان کے طلباء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حضرت محمد ﷺ طاقت کیلئے نہیں اسلام کی سربلندی کیلئے آئے تھے ۔
قائداعظم نے ہمیشہ پاکستان کیلئے سوچا انہوں نے اپنی ذات کیلئے کبھی نہیں سوچا۔ انہوں نے کہا کہ انسان اپنی سوچ سے بڑا ہوتا ہے، انسان جتنا اونچا سوچے گا اتنا ہی آگے بڑھے گا۔کبھی غلطیوں سے ہار نہیں ماننی چاہیے۔ ہمیشہ خود احتسابی کریں کہ آپ سے کیا غلطی ہوئی ہے۔ راستے میں کئی رکاوٹیں آتی ہیں جہاں آپ گر جاتے ہیں۔ کامیابی کا واحد راستہ کوشش ہے۔ عمران خان نے کہا کہ غلطی کی نشاندہی کرکے خود کودرست کریں اور اپنے خوابوں کی تکمیل کریں۔ دنیا میں کسی نے بھی کبھی بڑا کام مشکل کے بغیر نہیں کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہم متوسط طبقے کیلئے 50 لاکھ گھر بنا رہے ہیں ، پانی کے مسئلے کے حل کیلئے بھی ٹاسک فورس بنا دی ہے۔

sample-ad

Facebook Comments

POST A COMMENT.