غیرت کے نام پر شہری قتل

پاکستانسندھ
12
0
sample-ad

کراچی کے علاقے گلشن اقبال بلاک 8 میں فائرنگ کا واقعہ پیش آیا تھا جس کے نتیجے میں ایک شہری ہلاک ہوگیا ہے۔
پولیس کی ابتدائی تفتیش کے مطابق مقتول کی شناخت ارشاد کے نام سے ہوئی جو پارہ چنار کا رہائشی تھا اور کراچی میں گاڑی چلانے کا کام کرتا تھا۔ ارشاد کو اُس وقت نشانہ بنایا گیا جب وہ کسی کام سے گاڑی میں اکیلا جارہا تھا۔
واقعے کے بعد پولیس نے مقتول کی لاش کو اسپتال منتقل کیا، پوسٹ مارٹم رپورٹ میں یہ بات سامنے آئی کہ مقتول کو پانچ گولیاں ماری گئیں۔
ڈی آئی جی ایسٹ نے تھانہ گلشن اقبال کو شہری کے قتل کی تحقیقات کا حکم دیا، ایک روز چھان بین کے بعد مقتول کے بھائی نے پولیس کو اپنا بیان ریکارڈ کرایا۔
ایس پی گلشن غلام مرتضیٰ کا کہنا تھا کہ ارشاد نامی شہری کو غیرت کے نام پر قتل کیا گیا ، مقتول کے پارہ چنار میں ایک خاتون کے ساتھ تعلقات تھے جس پر اُسے وہاں چند ماہ قبل قتل کردیا گیا ۔خاتون کے قتل کے بعد ارشاد بھاگ کر کراچی آگیا اور اس نے یہیں سکونت اختیار کرلی۔
مقتول کے بھائی نے پولیس کو ریکارڈ کروائے گئے اپنے بیان میں اس بات کی تصدیق کی ہے کہ ارشاد کو پنچائیت کے فیصلے پر ہی قبیلے کے لوگوں نے فائرنگ کرکے قتل کیا۔
قتل کے مقدمے میں لڑکی کے والد اور رشتہ داروں کو نامزد کیا گیا ہے۔

sample-ad

Facebook Comments

POST A COMMENT.